✿⊱╮Apni Apni Passand ✿⊱╮

Discussion in 'Urdu Adab & Shayeri' started by Areej, May 1, 2013.

  1. Areej

    Areej Active Member


    لُطف جب تھا کہ کوئی پوچھتا دل کی حالت
    اور ہم شورشِ زنجیر کو دیکھا کرتے

    قابل اجمیری
    _________
     
    Sabnam Khan likes this.
  2. Areej

    Areej Active Member


    ہم کہ کھلتے تھے کبھی ضبطِ جنوں کی رُت میں
    حرفِ شِیریں کو بھی اب قطرۂ سم جانتے ہیں
    ________
     
    Sabnam Khan likes this.
  3. Areej

    Areej Active Member


    قاصد جو گیا میرا لے نامہ تو پھر اس نے
    نامہ کے کئے پرزے قاصد کو بٹھا رکھا
    غلام ہمدانی مصحفی
    ________
     
  4. Areej

    Areej Active Member


    تم بنو رنگ، تم بنو خوشبو
    ہم تو اپنے سخن میں ڈھلتے ہیں

    جون ایلیا
    _______
     
    Zeeshanef likes this.
  5. Izzy

    Izzy New Member

    Hi I was sent this recently. could someone translate what it means please?

    db44fe76-9002-40a0-95a9-d7531fb44476.jpg
     
    Zeeshanef likes this.
  6. Zeeshanef

    Zeeshanef Well-Known Member

    علاجِ درد سے کچھ اور درد بڑھ ہی گیا
    انھی کا ذکر کیا آنے جانے والوں نے

    ادیب سہارن پوری
     
    shakeel orakzai likes this.
  7. shakeel orakzai

    shakeel orakzai Super Moderator

    ذیشان بھائی کیسے مزاج ہیں۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔؟
    جمیل انجم صاحب انتقال کرگئے ہیں بھائی
     
  8. shakeel orakzai

    shakeel orakzai Super Moderator

     
  9. Sabnam Khan

    Sabnam Khan New Member

    इक ज़िंदगी अमल के लिए भी नसीब हो
    ये ज़िंदगी तो नेक इरादों में कट गई
    ik zindagī amal ke liye bhī nasīb ho
    ye zindagī to nek irādoñ meñ kaT ga.ī
    اک زندگی عمل کے لیے بھی نصیب ہو
    یہ زندگی تو نیک ارادوں میں کٹ گئی
    Refrence:rekhta.org
     
  10. Areej

    Areej Active Member

    انا للہ و انا الیہ راجعون

    بہت افسوس ہوا یہ جان کر ....اللہ تعالیٰ مرحوم کو جوارِ رحمت میں جگہ دیں اور لواحقین کو صبرِ جمیل عطا فرمائیں، آمین یا رب العالٰمین...
     
  11. Zeeshanef

    Zeeshanef Well-Known Member

    شکیل بھائی بہت افسوسناک خبر ہے،یقن نہیں ہورہا کہ اجمل انجم صاحب اب اس دنیا میں نہیں رہے۔
    اناللہ وانا علیہ راجعون- اللہ تعالی سے دعا ہے کہ وہ ان کی مغفرت فرمائے اور ان کے درجات بلند فرمائے۔ آمین۔

    اردو پیجز پر ہی، پچھلی ایک دہائی میں اجمل انجم صاحب کی تحریر و انتخابات سے ہم سب نے بہت سیکھا۔۔۔ افسوس کہ اب وہ ہم میں نہیں رہے۔۔۔
     
    Last edited: Jan 25, 2017
  12. Sabnam Khan

    Sabnam Khan New Member

    बढ़ के तूफ़ान को आग़ोश में ले ले अपनी
    डूबने वाले तिरे हाथ से साहिल तो गया
    baDh ke tuufaan ko aaGosh men le le apnii
    Duubne vaale tire haath se saahil to gayaa
    بڑھ کے طوفان کو آغوش میں لے لے اپنی
    ڈوبنے والے ترے ہاتھ سے ساحل تو گیا
     
    Areej likes this.
  13. Zeeshanef

    Zeeshanef Well-Known Member

    یارانِ رفتہ آہ بہت دور جا بسے
    دل ہم سے رک گیا تھا انہوں کا جدا بسے

    کوچے میں تیرے ہاتھ ہزاروں بلند ہیں
    ایسے کہاں سے آ کے یہ اہلِ دعا بسے

    کرتا ہے کوئی زیبِ تن اپنا وہ رشکِ گُل
    پھولوں میں جب تلک کہ نہ اس کی قبا بسے

    بلبل کہے ہے جاؤں ہوں، کیا کام ہے مرا
    میں کون، اس چمن میں نسیم و صبا بسے

    جنگل میں جیسے قافلہ آ کر اتر رہے
    یوں ہیں یہ رہروانِ عدم جا بجا بسے

    یا رب ہو واقعہ کوئی ایسا کہ وہ پری
    گھر اپنا چھوڑ کر کے مرے پاس آ بسے

    جانے سے تیرے کشورِ دل ہو گیا خراب
    ویرانہ ہے یہ اب کوئی یاں آ کے کیا بسے

    عالم ہے زیرِ خاک بھی گر تجھ کو سوجھ ہو
    کیا اک طریق ساتھ ہیں اہلِ فنا بسے

    بلبل نے آشیانہ چمن سے اٹھا لیا
    پھر اس چمن میں بوم بسے یا ہُما بسے

    حیرت ہے یہ کہ چھوڑ کے آبادیِ عدم
    اس منزلِ خراب میں ہم کیونکہ آ بسے

    ہمسائے مصحفی کے میں گھر لے دیا تو وہ
    بولے کہ "پاس ایسے کے میری بلا بسے"

    (غلام ہمدانی مصحفی)
     
    Areej likes this.
  14. Areej

    Areej Active Member

    خود فریبی ہی سہی کیا کیجیے دل کا علاج
    تو نظر پھیرے تو ہم سمجھیں کہ پہچانا نہیں

    _______
     
    Zeeshanef likes this.
  15. Zeeshanef

    Zeeshanef Well-Known Member

    ستاروں سے آگے جہاں اور بھی ہیں
    ابھی عشق کے امتحاں اور بھی ہیں

    تہی زندگی سے نہیں یہ فضائیں
    یہاں سیکڑوں کارواں اور بھی ہیں

    قناعت نہ کر عالم رنگ و بو پر
    چمن اور بھی آشیاں اور بھی ہیں

    اگر کھو گیا اک نشیمن تو کیا غم
    مقامات آہ و فغاں اور بھی ہیں

    تو شاہیں ہے پرواز ہے کام تیرا
    ترے سامنے آسماں اور بھی ہیں

    اسی روز و شب میں الجھ کر نہ رہ جا
    کہ تیرے زمان و مکاں اور بھی ہیں

    گئے دن کہ تنہا تھا میں انجمن میں
    یہاں اب مرے رازداں اور بھی ہیں

    علامہ اقبال
     
  16. Boring

    Boring New Member

    مرے خدایا! میں زندگی کے عذاب لکھوں کہ خواب لکھوں
    یہ میرا چہرہ، یہ میری آنکھیں بجھے ہوئے چراغ لکھوں

    چاند چہرہ ستارہ آنکھیں وہ مہرباں سایہ دار زلفیں
    وہ اپنے رفاقتوں کے محبتوں کےپیماں لکھوں
     
    Last edited: Nov 13, 2017
  17. Boring

    Boring New Member

    ہے دعا یاد مگر حرفِ دعا یاد نہیں
    میرے نغمات کو اندازِ دعا یاد نہیں
    ہم نے جن کے لئیے راہوں میں بچھایا تھا لہو
    ہم سے کہتے ہیں وہی، عہدِ وفا یاد نہیں
    زندگی جبرِ مسلسل کی طرح کاٹی ہے
    جانے کس جرم کی پائی ہے سزا، یاد نہیں

    ساغر صدیقی
     

Share This Page