*.......::Lafzon ki Beet Bazi "Part2"::........*

Discussion in 'Urdu Adab & Shayeri' started by Bobcut_monster, Jun 26, 2008.

  1. Zeeshanef

    Zeeshanef Well-Known Member

    یہ مقامِ عشق ہے کون سا، یہ ہیں کیسی صبر کی منزلیں
    نہ تڑپ ہے دل میں نہ درد ہے، نہ سکون ہے نہ قرار ہے
    سراج لکھنوی

    اگلا لفظ: انتہا
     
  2. shakeel orakzai

    shakeel orakzai Super Moderator

    ہجر کی بد دعا نہ ہو جانا
    دیکھ لینا،سزا نہ ہو جانا

    موڑ تو بے شُمار آئیں گے
    تھک نہ جانا،جُدا نہ ہو جانا

    عشق کی انتہا نہیں ہوتی
    عشق کی انتہا نہ ہو جانا

    اگلا لفظ : برہم
     
  3. Zeeshanef

    Zeeshanef Well-Known Member

    میں نے فانی ڈوبتی دیکھی ہے نبضِ کائنات
    جب مزاجِ یار کچھ برہم نظر آیا مجھے
    فانی بدایونی

    اگلا لفظ: دشوار
     
  4. Hyderabadi

    Hyderabadi New Member


    بس کہ دشوار ہے ہر کام کا آسان ہونا
    آدمی کو بھی میسر نہیں انسان ہونا


    اگلا لفظ
    کام
     
  5. shakeel orakzai

    shakeel orakzai Super Moderator

    اگر پوچھا کہ مجھ سے کام کیا ہے، کیا کہوں گا میں
    کہا اس کام کا انجام کیا ہے، کیا کہوں گا میں
    مجھے پہچاننے سے اُس نے گر انکار کر ڈالا
    اگر پوچھا کہ تیرا نام کیا ہے، کیا کہوں گا میں
    عدیمؔ
    اگلا لفظ : پیام
     
  6. Areej

    Areej Member



    ہم کو نہ دے پیام رہائی،ہوائے صبح
    وجہ خروش خانہ زنجیر ہم نہ تھے

    ہر دور بے صدا میں ہر ایک ظلم کے خلاف
    ہم کو ہی بولنا تھا کہ تصویر ہم نہ تھے


    محسن نقوی

    اگلا لفظ ۔۔۔۔۔ زنجیر

     
  7. Zeeshanef

    Zeeshanef Well-Known Member

    زندگی جبر ہے اور جبر کے آثار نہیں
    ہاے اِس قید کو زنجیر بھی درکار نہیں
    فانی بدایونی

    اگلا لفظ ہے: جبر
     
  8. shakeel orakzai

    shakeel orakzai Super Moderator

    خطا کسی کی ہو لیکن سزا کسی کو ملے
    یہ بات جبر نے چوڑی ہے ہر صدی کے لیے

    اگلا لفظ : رخسار
     
  9. Areej

    Areej Member



    اس قدر پیار سے اے جانِ جہاں رکھا ہے
    دل کے رخسار پہ اس وقت تیری یاد نے ہاتھ
    یوں گمان ہوتا ہے گرچہ ہے ابھی صبح فراق
    ڈھل گیا ہجر کا دن آ بھی گئی وصل لی رات

    فیض احمد فیض

    اگلا لفظ ہے ۔۔۔۔۔ ہجر

     
  10. Zeeshanef

    Zeeshanef Well-Known Member

    چھوٹ جائیں ہم عذابِ ہجر سے
    اب تو ایسی کوئی صورت کیجیے
    مفت میں مر جائیں گے بیمارِ ہجر
    دیکھیے، اِتنی نہ غفلت کیجیے
    تعشق لکھنوی

    اگلا لفظ: آثار
     
  11. shakeel orakzai

    shakeel orakzai Super Moderator

    ہر مرحلہ شوق سے لہرا کے گزر جا
    آثار تلاطم ہوں تو بل کھا کے گزر جا

    بہکی ہوئی مخمور گھٹاؤں کی صدا سن
    فردوس کی تدبیر کو بہلا کے گزر جا
    اگلا لفظ : تعبیر
     
    Last edited: Apr 10, 2012
  12. Areej

    Areej Member

    میں نے دیکھا ہے بہاروں میں چمن کو جلتے
    ہے کوئی خواب کی تعبیر بتانے والا

    احمد فراز
    نیا لفظ ہے ۔۔۔۔۔۔۔چمن


     
  13. Zeeshanef

    Zeeshanef Well-Known Member

    وہ جو شاخ شاخ پہ پھول تھے ہے کسے خبر کہ گئے کدھر
    یہ تو باغ باں کو ہی ہے خبر کہ چمن میں کیسے دھواں اُٹھا
    گلنار آفریں
    اگلا لفظ: رسم
     
  14. Areej

    Areej Member



    عجب ہیں رسمِ گاہِ زندگی کے یہ انداز
    اُسی نے وار کیا جس نے بےسپر جانا

    ہمارے دم سے ہی آوارگیِ شب تھی
    ہمیں عجیب لگے اب شام ہی سے گھر جانا

    عالمتاب تشنہ

    نیا لفظ ہے ۔۔۔۔۔۔۔۔ انداز


     
  15. Zeeshanef

    Zeeshanef Well-Known Member

    مجھے شادابی صحنِ چمن سے خوف آتا ہے
    یہی انداز تھے جب لُٹ گئی تھی زندگی اپنی
    ظہیر کاشمیری

    اگلا لفظ: قرار

     
    Last edited: Apr 30, 2012
  16. shakeel orakzai

    shakeel orakzai Super Moderator

    شرطیں ایک دوسرے کی منظور تھی یوں تو
    پر مسودہ ہمارا کبھی قرار تک نہیں پہنچا

    اگلا لفظ : سلسلہ
     
  17. Areej

    Areej Member




    اڑا دوں سبز پتوں میں چھپی خواہش کی سب چڑیاں
    کبھی دل کے شجر کو زور سے جھنجھوڑ کر دیکھوں

    عدم تکمیل کے دکھ سے بچا لوں اپنی سوچوں کو
    جہاں سے سلسلہ ٹوٹے وہیں سے جوڑ کر دیکھوں


    عدم

    نیا لفظ ہے۔۔۔۔شجر



     
  18. shakeel orakzai

    shakeel orakzai Super Moderator

    خبر ہوتی اگر یہ جال ہے قسمت کی سازش کا

    لکیریں اپنے ہاتھوں کی میں اسی لمحے مٹا دیتا

    شجر ہوتا تو تیرا نام پتوں پر لکھ لکھ کر

    تمہارے شہر کی جانب ہواؤں میں اُڑا دیتا

    اگلا لفظ : بھنور
     
    Last edited: May 2, 2012
  19. shahzadafzal

    shahzadafzal New Member


    بھنور کی گود میں جیسے کنارہ ساتھ رہتا ہے
    کچھ ایسے ہی تمہارا اور ہمارا ساتھ رہتا ہے
    محبت ہو کہ نفرت ہو اسی سے مشورہ ہوگا
    مری ہر کیفیت میں استخارہ ساتھ رہتا ہے

    اگلا لفظ : گود
     
  20. shakeel orakzai

    shakeel orakzai Super Moderator


    تمہاری راہ میں آنکھیں بچھا رہے تھے کبھی
    جو آج راہ بدلتے ہیں کچھ خبر ہے تمہیں

    بلندیوں پے نا ڈھونڈو کے جوہر نایاب
    زمین کی گود میں پلتے ہیں کچھ خبر ہے تمہیں

    اگلا لفظ : آفتاب
     

Share This Page